لڑکا کی خودکشی 68

چترال میں ایک اور نوجوان نے زندگی کے چراغ گل کر دی


رپورٹ: گل حماد فاروقی


چترال میں پیر کے روز ایک اور نوجوان نے دریا میں چھلانگ لگا کر زندگی کی چراغ گل کر دی۔

پولیس اور مقامی ذرائع کے مطابق 9 اگست دن کے تقریبا ڈیڑھ بجے چترال شہر کی طرف سے گہتک دنین آتے ہوئے ایک لڑکاعمر خان نے پلی ٹرالی سے دریائے چترال میں چھلانگ لگا کر خودکشی کی۔

۔پلی ٹرالی آپریٹر کے مطابق نوجوان ٹرالی میں اکیلا سوار تھا جبکہ آپریٹر گہتک کی طرفپلوہے کی پلی ٹرالی کو کنٹرول کررہا تھا۔ جیسے ٹرالی دریا کے درمیاں پر پہنچا تو نوجوان نےدریا میں چھلانگ لگا لیا ۔ ٹرالی کے اندر سے نوجوان کا موبائل فون برآمد ہوئے ۔

آخری اطلاعات کے مطابق نوجوان جس کی عمر تقریبا ۱۸ سال ہے کی لاش نوغورگی کے مقام پر دریاۓ چترال سے نکال لی گئی ہے ۔

ذرائع کے مطابق عمر خان کاروان مسجد دنین کے پیش امام کا بیٹا تھا۔

چترال پولیس ٹیم اس واقعے کی تحقیقات کررہی ہے ۔

خود کشی کی وجوہات اس رپورٹ کے لکھنے تک معلوم نہیں ہو سکا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں